Delhi-NCR

کورونا کی تیسری لہر کے لیے حکومت تیار:صحت اور خاندانی بہبود کے وزیر منسُکھ مانڈویا

حکومت نے منگل کے روز راجیہ سبھا میں کہا کہ کورونا وبا کی تیسری لہر کو روکنے کے لیے تمام فریقوں کے ساتھ مل کر ہر ممکن تیاری کی گئی ہے اور اس کے لیے پہلے ہی 23 ہزار کروڑ روپیے کے پیکج کا اعلان کیا گیا ہے ایوان میں کورونا وبا پر تقریباً چار گھنٹے تک ہوئی بحث کا جواب دیتے ہوئے صحت اور خاندانی بہبود کے وزیر منسُکھ مانڈویا نے کہا کہ مرکزی حکومت نے پیکج کا جو اعلان کیا ہے، اس سے ریاستوں کو مدد کی جائے گی۔ انہوں نے ریاستوں سے اپنے منصوبوں کو جلد سے جلد مرکز کو بھیجنےکی درخواست کی تاکہ فوراً رقم مہیا کروائی جا سکے۔

مسٹر مانڈویا نے کہا کہ مرکزی حکومت کے پیکج سے ضلع اسپتالوں میں بچوں کے لیے وارڈ، آئی سی یو کی سہولت، دوا کی دستیابی اور ایمبولینس کی سہولت مہیا کروائی جائے گی۔ یہ رقم نو ماہ میں خرچ کی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ کووڈ-19 کی دوسری لہر کے دوران ملک میں وسیع پیمانے پر میڈیکل آکسیجن کا مطالبہ بڑھا تھا اور اسی کا خیال کرکے مرکزی حکومت نے پورے ملک میں 1573 آکسیجن پلانٹ لگانے کا فیصلہ کیا ہے۔ ان میں سے 316 پلانٹ شروع ہو گئے ہیں۔ باقی پلانٹس اگست تک نصب کر دیے جائیں گے ۔ انہوں نے عوامی نمائندوں سے کہا کہ وہ بھی ان پلانٹس پر نظر رکھیں۔

وزیر صحت نے کہاکہ ملک میں کورونا کے ویکسین پروڈکشن کی استعداد بڑھانے کی کوششیں کی جا رہی ہیں اور جیسے جیسے پروڈکشن بڑھے گا ویسے ویسے ٹیکے لگانے کی شرح بڑھے گی۔ ابھی تقریباً 50 لاکھ یومیہ کی رفتار سے ویکسین لگائے جا رہے ہیں۔ بعد میں اسے 60 لاکھ اور 75 لاکھ کی جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ کورونا وائرس سے متعلق دواؤں کا پروڈکشن بڑھایا گیا ہے اور بلیک فنگس کی دوا کا پروڈکشن بڑھانے کے علاوہ درآمد بھی کی گئی ہے۔

 

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close